افرادی قوت کی برآمدات  بڑھانے کیلئے اوورسیز ایمپلائمنٹ پروموٹرز کو کوٹہ دیں گے ساجد  طوری کا اعلان

افرادی قوت کی برآمدات  بڑھانے کیلئے اوورسیز ایمپلائمنٹ پروموٹرز کو کوٹہ دیں … اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)   وفاقی وزیر برائے اوورسیز پاکستانیز اینڈ ہیومین ریسورس ڈویلپمنٹ ساجد حسین طوری نے کہا ہے  کہ حکومت افرادی قوت کی برآمدات کو بڑھانے کے لیے اوورسیز ایمپلائمنٹ پروموٹرز کیلئے کوٹہ مختص کرنے پر کام کر رہی ہے کیونکہ حکومت نے اس سال 10 لاکھ افراد کو باہر بھیجنے کا ہدف مقرر کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ افرادی قوت کی برآمد کے لیے نئی مارکیٹس تلاش کر رہے ہیں اور اس سلسلے میں رومانیہ، پرتگال اور یونان سمیت کئی ممالک کا دورہ کر چکے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مالٹا، پولینڈ، ہنگری، جنوبی کوریا، جاپان، ملائیشیا، تاجکستان، سعودی عرب، ایران اور عراق نے بھی پاکستان سے افرادی قوت درآمد کرنے میں دلچسپی ظاہر کی ہے اور اس سلسلے میں ان میں سے کئی کے ساتھ مفاہمت کی یادداشت پر دستخط کیے جا رہے ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے دورے کے موقع پر تاجر برادری سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ساجد حسین طوری نے کہا کہ پاکستان میں 4700 سے زائد اوورسیز ایمپلائمنٹ پروموٹرز ہیں جن میں سے تقریبا 2200 فعال ہیں۔ انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ اوورسیز ایمپلائمنٹ پروموٹرز افرادی قوت کی برآمدات کو فروغ دینے میں اپنا کردار ادا کریں حکومت انہیں سہولت فراہم کرے گی۔ انہوں نے اعلان کیا کہ اوورسیز ایمپلائمنٹ پروموٹرزکو ان کی وزارت کے بیرونی وفود میں شامل کیا جائے گا تاکہ وہ افرادی قوت کی برآمد کی نئی راہیں تلاش کر سکیں۔  انہوں نے کہا کہ اسلام آباد، سکھر، ایبٹ آباد، بنوں اور گلگت بلتستان میں پروٹیکٹر آفسز کھولے جائیں گے تاکہ افرادی قوت کی برآمد کو فروغ دینے میں اوورسیز ایمپلائمنٹ پروموٹرز کو سہولت ہو۔   کمیونٹی ویلفیئر اتاشیوں کے لیے ایک نئی پالیسی بنائی جا رہی ہے تاکہ انہیں کمیونٹی ویلفیئر کے اہداف دیے جائیں اوروہ سمندر پار پاکستانیوں کے مسائل کو حل کرنے میں اپنا فعال کردار ادا کریں۔ انہوں نے یقین دلایا کہ تاجر برادری نے جن مسائل کی نشاندہی کی ہے ان کے ازالے کی کوشش کی جائے گی۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے اسلام آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدر احسن ظفر بختاوری نے کہا کہ پاکستان کو زرمبادلہ کے ذخائر میں کمی کا سامنا ہے اور افرادی قوت کی برآمد کو فروغ د ینے سے ترسیلات زر میں اضافہ ہو گا  اور  زرمبادلہ کے ذخائر بہتر ہوں گے۔ چیمبر کے سینئر نائب صدر فاد وحید، پاکستان اوورسیز ایمپلائمنٹ پروموٹرز ایسوسی ایشن کے سینئر وائس چیئرمین حافظ فہیم اقبال، وائس چیئرمین اسد حفیظ کیانی، ظفر بختاوری، میاں شوکت مسعود، دلدار عباسی، ضیا قریشی، اطہر اقبال، خورشید برلاس اور دیگر نے بھی نیوٹیک، اوپی ایف، بیورو آف امیگریشن، ای او بی آئی اور ورکرز ویلفیئر فنڈ سے متعلق اوورسیز ایمپلائمنٹ پروموٹرز کے مختلف مسائل سے وفاقی وزیر کو آگاہ کیا اور ان کے حل کی ضرورت پر زور دیا۔ مزید : قومی –
Source : https://dailypakistan.com.pk/06-Dec-2022/1517268

اپنا تبصرہ بھیجیں