افغان طالبان کا پاکستانی سفارتخانے پر حملے میں بیرونی ہاتھ ملوث ہونے کا دعویٰ

افغان طالبان کا پاکستانی سفارتخانے پر حملے میں بیرونی ہاتھ ملوث ہونے کا … کابل (ویب ڈیسک ) طالبان حکومت نے  کابل میں پاکستانی سفارتخانے پر ہونے والے حملے میں بیرونی ہاتھ کے ملوث ہونے کا دعویٰ کر دیا۔ نجی ٹی وی اے آر وائی کے مطابق ترجمان افغان طالبان ذبیح اللہ مجاہد نے کہا کہ  پاکستانی سفارتخانے پر حملے کے الزام میں گرفتار غیر ملکی شہری داعش کا رکن ہے ، حملے کے پیچھے غیر ملکیوں کا ہاتھ ہے  جس کا مقصد اسلامی برادر ممالک کے درمیان بد اعتمادی کی فضا پیدا کرنا تھا ، واقعے سے متعلق تحقیقات کی جا رہی ہیں۔  خیال رہے کہ تین روز قبل کابل میں پاکستانی ناظم الامور پر اس وقت حملہ کیا گیا جب وہ چہل قدمی کر رہے تھے ، حملے میں ناظم الامور عبید نظامانی بال بال بچے ، میڈیا رپورٹس کے مطابق گولی ان کو چھوتی ہوئی  گارڈ کو لگی جس سے ان کا گارڈ شدید زخمی ہو گیا۔  مزید : بین الاقوامی –
Source : https://dailypakistan.com.pk/05-Dec-2022/1516813

اپنا تبصرہ بھیجیں