ریپ کیس میں پھنسانے کی دھمکی دیکر لاکھوں روپے لوٹنے والی یوٹیوبرگرفتار کرلی گئی 

ریپ کیس میں پھنسانے کی دھمکی دیکر لاکھوں روپے لوٹنے والی یوٹیوبرگرفتار کرلی … نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) ریپ کیس میں پھنسانے دھمکی دے کر کاروباری شخص کے بیٹے سے 80لاکھ روپے لوٹنے والی بھارتی یوٹیوبر کو گرفتار کر لیا گیا۔ ٹائمز آف انڈیا کے مطابق بھارتی دارالحکومت نئی دہلی کی نمرہ قادر نامی یہ لڑکی یوٹیوب اور دیگر سوشل میڈیا پلیٹ فارمز پر کافی مقبول ہے، جس پر الزام ہے کہ اس نے ایک پرائیویٹ فرم کے مالک کے بیٹے کو بلیک میل کرکے اس سے بھاری رقم ہتھیائی۔ اس واردات میں نمرہ قادر کا شوہر منیش عرف ویرات بینی وال بھی ملوث تھا جو مفرور ہو چکا ہے۔ نمرہ کو عدالت میں پیش کیا گیا جہاں سے اسے 4روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کر دیا گیا۔پولیس کے مطابق ویرات بینی وال کی گرفتاری کے لیے چھاپے مارے جا رہے ہیں۔ 22سالہ نمرہ قادر کے یوٹیوب پر 6لاکھ 17ہزار سبسکرائبرز ہیں۔ اس کے خلاف بادشاہ پور کے رہائشی 21سالہ دنیش یادو نے اگست میں ایف آئی آر درج کرائی تھی۔ پولیس کے مطابق نمرہ قادر نے دوران تفتیش اپنے جرم کا اعتراف کر لیا ہے۔  دنیش نے ایف آئی آر میں بتایا کہ ”نمرہ نے مجھ سے دوستی کی اور ایک رات وہ نمرہ اور اس کے شوہر کے ساتھ ایک ہوٹل روم میں ٹھہرا۔ اگلی صبح نمرہ نے دھمکی دے دی کہ اگر میں نے اسے اپنے بینک کارڈز نہ دیئے تو وہ مجھے ریپ کیس میں پھنسا دے گی۔اس کے بعد وہ مسلسل مجھ سے رقم لوٹتی رہی۔ بالآخر میں نے اپنے باپ کو بتا دیا اور وہ مجھے لے کر پولیس کے پاس چلا گیا۔“ مزید : تفریح –
Source : https://dailypakistan.com.pk/07-Dec-2022/1517682

اپنا تبصرہ بھیجیں