عامر خان اپنے والد کے مالی حالات یاد کر کے آبدیدہ ہو گئے

عامر خان اپنے والد کے مالی حالات یاد کر کے آبدیدہ ہو گئے ممبئی(ڈیلی پاکستان آن لائن)بالی ووڈ کے  مسٹر پرفیکشنسٹ عامر خان اپنے والد کے  مشکل ترین دنوں کو یاد کرکے آبدیدہ ہوگئے۔ “ہیومنز آف بمبئی” کو انٹرویو دیتے ہوئے عامر خان سے ماضی سے متعلق کچھ سوالات کئے گئے جس پر اداکار اپنے آنسو وٗ ں پر قابو نہ پا سکے اور آبدیدہ ہو گئے۔ عامر خان نے  کہاکہ ” میرے والد طاہر حسین فلم پروڈیوسر تھے اور   وہ بہت سادہ انسان تھے، اس لیے کئی لوگ سمجھتے تھے ہمارے مالی حالات اچھے ہیں لیکن ایسا نہیں تھا، والد نے کئی لوگوں سے ادھار پیسے لے رکھے تھے جنہیں وہ واپس نہیں کرپا رہے تھے اور روز کئی فون کالز آتیں جس میں لوگ ان سے اپنے پیسوں کا مطالبہ کیا کرتے۔اکثر والد کی فون پر لڑائی بھی ہو جاتی  اور وہ کہتے” نہیں ہے میرے پاس ,میں کیا کروں ۔مجھے آج بھی یاد ہے سنیل دت نے ان کی ایک فلم “زخمی” میں کام کیا تھا، والد نے ان کے پیسے نہیں دیئے تھے اور وہ فلم ادھار پر تھی”۔ انہوں نے کہا کہ “فلم ریلیز سے قبل والد نے سنیل جی سے درخواست کی کہ مجھے فلم ریلیز کرنے دیں، جب پیسے ہوں گے تو لوٹا دوں گا تو سنیل دت نے رضامندی دے دی، بعد میں جب فلم چلی اور والد نے انہیں پیسے دیے تو انہیں یقین نہیں آیا اور انہوں نے کہا کہ میں تو بھول چکا تھا، کیونکہ فلم ریلیز ہونے کے بعد پروڈیوسرز پیسے نہیں دیتے”۔عامر خان نے بتایا کہ “والد کو اس حال میں دیکھ کر بہت تکلیف ہوتی تھی، بعد میں جب حالات بہتر ہوئے تو ان کی کوشش ہوتی تھی کہ جس سے جو رقم لی ہے اسے واپس کی جائے”۔ پرانی مشکل حالات کو یاد کر کے عامر خان رو پڑے اور کچھ دیر کے لیے انٹرویو چھوڑ کر چلے گئے ، تاہم کچھ دیر بعد خود کو سنبھال کر دوبارہ انٹرویو شروع کیا گیا۔ انہوں نے انٹرویو میں ایک اور انکشاف کرتے ہوئے کہا کہ  “مجھے نہیں معلوم انڈسٹری میں لوگ مجھے پرفیکشنسٹ کیوں کہتے ہیں، میں ہر چیز میں جادو تلاش کرتا ہوں اور ہمیشہ دل کی سنتا ہوں، دماغ کہے بھی کہ نہیں یہ چیز نہیں کرنی،تب بھی نہیں سنتا اور جو دل میں آئے وہی کرتا ہوں ۔اگر مجھے ستارے زمین پر بنانے ہیں اور مجھے لگتا ہے یہ ایک حماقت ہے لیکن میں پھر  بھی بناتا ہوں”۔ مزید : تفریح –
Source : https://dailypakistan.com.pk/05-Dec-2022/1516780

اپنا تبصرہ بھیجیں