ایک ڈرامہ جس کی شوٹنگ کے دوران ڈر جانے کی وجہ سے اداکارہ ثناء عسکری کی کئی دن طبیعت خراب رہی

 

اداکارہ ثنا عسکری نے انکشاف  کیا کہ ایک ہارر  ڈرامے کی ریکارڈنگ کے دوران سیٹ پر کبھی چیزیں گرتیں،کبھی دروازے کی گھنٹی بجتی لیکن کیمر ہ کا ویو سامنے تھا، باہر کوئی نہ ہوتا،  شوٹنگ کے دوران سیٹ پر  خوفناک اور عجیب و غریب حرکات محسوس کیں۔

 جیو نیوز کے پروگرام "ہنسنا منع ہے" میں اداکارہ نے مزید بتایا کہ شوٹنگ کے دوران کبھی خوفناک شکلیں نظر آتیں تو کبھی اجنبی لوگ نظر آتے جس پر خوف سے بُرا حال ہو جاتا،  تصاویر کے فریم لٹکاتے تھے اور جیسے ہی ریکارڈنگ شروع ہوتی تو وہ گر جاتے تھے،  کچھ سمجھ ہی نہیں آتا تھا کہ کیا ہو رہا ہے اور  اس کے پیچھے کون ہے، ان سب چیزوں کی وجہ سے  کافی دن تک طبیعت بھی خراب رہی۔

ان کا کہناتھاکہ جب گھر پہنچی اور سونے کے بعد علی الصبح آنکھ کھلی تو ارد گرد چیزیں موجود تھیں، بولا بھی نہیں جارہا تھا۔  ان کے شوہر نے بتایا کہ ریڈیو سے گھر پہنچا تو یہ جاگ رہی تھیں اور بات ہی نہیں کررہی تھیں جس کی وجہ سے میں بھی پریشان ہوگیا، سوکر پھر اٹھا تو یہ رو رہی تھیں  اور پھر فجر تک یہی سلسلہ چلتا رہا، والدہ کو بھی لگا کہ میاں بیوی میں کوئی جھگڑا ہوا ہے ۔ 

منہاج عسکری نے مزید بتایا کہ پھر ثناء عسکری کی والدہ کو بھی ملوث کیا، مولوی کے پاس لے گئے تو انہوں نے کہا کہ یہ عورت ہیں تو مسجد کے اندر نہیں آئیں گی ، پھر انہیں باہر لایا گیا اور کچھ دم درود کے بعد ٹھیک ہوئی تھیں۔


ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے